شاعر اور دسمبر


سارے چھپ جاؤ دسمبر آ ر ہا ہے ہنسنے کوئی نا پائے یہ مہینہ غم کا ہے دسمبر سے پتہ نئیں سب کو کیا ویر ہے۔ ابھی آمکدا نئیں اور رونا دھونا پہلے شروع، دسمبر نہ ہوا تڑپ تڑپیا ہوگیا (اب اگر تڑپ تڑپیا کا نہیں پتہ تو بچپن میں سنی کہانی کے کسی اور …

Advertisements