طفل تسلیوں سے دل بہل رہا ہے


طفل   تسلیوں    سے   دل    بہل   رہا    ہے
آج    کل    سب     ٹھیک    چل    رہا    ہے
پرائے     گھر     جو    لگائی     تھی    کل
آج   اسی  آگ  سے  اپنا  گھر  جل  رہا  ہے
واقعہ   جان  کر  فراموش  کر  رہے  جسے
سانحہ ہے زمانے کی کھوکھ میں پل رہا ہے
نا   ٹھیک    بھی   ٹھیک    لگنے   لگا   ہے
وقت      یقیناً          بدل         رہا        ہے
اس   مہارت   سے   کیا   ہے خود  کو برباد
دشمنِ   جاں    بھی    ہاتھ    مل    رہا    ہے

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

w

Connecting to %s